مرکزی مینیو کھولیں

تبدیلیاں

75 بائٹ کا اضافہ ، 1 سال پہلے
م
صفائی بذریعہ خوب using AWB
[[File:Sanzio 01 Plato Aristotle.jpg|thumb|<center>''تمام تعلیمات اور علماء کا علم پہلے سے موجود علم سے ہی نکلا ہے۔'' <br> - [[ارسطو]], (384 ق م–322 ق م)</center>]]'''علم''' ایک ایسی چیز ہے جو ذی روح کو اشیاء کے بارے میں آشناء کرتی ہے اور اس علم سے ہم نتائج اور مزید علم حاصل کرتے ہیں۔کسی چیز کے بارے میں جاننا ہی علم ہے جو [[تفکر]]، [[تجربہ]]یا [[تعلیم]] کے ذریعے کسب کی جائے۔
ۜ
==اقتباسات, قدیم تاریخ==
=== یونانی ===
*وہ جو صرف علم جاننے کے لئے کوئی علم حاصل کرتا ہے وہی شخص سب سے بہتر علم کو ہی اپناتا ہے۔
ارسطو, Metaphysics book 1, part 2, 982a31, Complete Works (1984), vol. 2, p. &nbsp;1554.
γνῶθι σεαυτόν.
*اپنے آپ کو جانو.
Variant translations:
*تھیلس سے کسی نے پوچھا سب سے مشکل علم کیا ہے، کہا نفس شناسی."
Diogenes Laertius, Thales, IX. Cited in: Hoyt's New Cyclopedia Of Practical Quotations (1922), p. &nbsp;419-23.
*تمام علم جو عدل و فضیلت سے ہٹی ہوئی ہو دلفریب تو لگتی ہے لیکن دانائی نہیں ہوتی۔
افلاطون, Menexenus.
Εν οίδα, ότι ουδέν οίδα.
*میری علم بس ہ ہے کہ میرے پاس کوئی علم نہیں۔
سقراط, Plato, Phædrus, Section CCXXXV. Cited in: Hoyt's New Cyclopedia Of Practical Quotations (1922), p. &nbsp;419-23.
*علم تب بہت خطرناک ہوتی ہے
جب یہ ۜکوئی مدد نا دے سکے
=== لاطینی===
*علم حاصل کرنا ایک فن ہے اور علم کو منتقل کرنا بھی ایک خاص فن ہے
سیزارو, De Legibus, II. 19. Cited in: Hoyt's New Cyclopedia Of Practical Quotations (1922), p. &nbsp;419-23.
*Minime sibi quisque notus est, et difficillime de se quisque sentit.
ہر کوئی خود کو بہت کم جانتا ہے اور خود کو جاننا بہت مشکل کام ہے۔
Cicero, De Oratore, III. 9. Cited in: Hoyt's New Cyclopedia Of Practical Quotations (1922), p. &nbsp;419-23.
*Nescire autem quid ante quam natus sis acciderit, id est semper esse puerum.
وہ شخص جو اپنی پیدائش سے قبل کو نہیں جانتا ہمیشہ بچہ ہی رہتا ہے۔
سیزارو, De Oratore, XXXIV. Cited in: Hoyt's New Cyclopedia Of Practical Quotations (1922), p. &nbsp;419-23.
 
*ایک شخص سب کچھ نہیں جان سکتا.
Plautus (254–184 BC)
*جنت سے نکال دینے کا مفہوم یہ ہے کہ :اپنے آپ کو جانو۔
Juvenal, Satires, XI. 27. Quote reported in Hoyt's New Cyclopedia Of Practical Quotations (1922), p. &nbsp;419-23.
Scire est nescire, nisi id me scire alius scierit.
*ہماری حسیات ہی ہمیں بہترین علم دیتی ہے۔کوئی دوسرا کیسے درست غلط میں فرق کرسکتا ہے؟
Lucretius, De Rerum Natura, I, 700. Cited in: Hoyt's New Cyclopedia Of Practical Quotations (1922), p. &nbsp;419-23.
Et teneo melius ista quam meum nomen.
*میں ان تمام کو اپنے نام سے بہتر جانتا ہوں۔
Martial, Epigrams (c. 80-104 AD), IV. 37. 7. Quote reported in Hoyt's New Cyclopedia Of Practical Quotations (1922), p. &nbsp;419-23.
Scire tuum nihil est, nisi te scire hoc sciat alter?
*کیا آپ کے علم کی کوئی قدر نا ہوگی جب تک کہ دوسرے کو آپکےعلم نا ہو؟
Natura semina scientiæ nobis dedit, scientiam non dedit.
*قدرت نے ہمیں علم کی طلب دی ہے نا خود علم۔
Seneca the Younger, Epistolæ Ad Lucilium, CXX. Cited in: Hoyt's New Cyclopedia Of Practical Quotations (1922), p. &nbsp;419-23.
 
Faciunt næ intelligendo, ut nihil intelligant.
*بہت سارا علم جان کر وہ یہی جانے کہ کچھ نا جانے۔
Terence, Andria, Prologue, XVII. Quote reported in Hoyt's New Cyclopedia Of Practical Quotations (1922), p. &nbsp;419-23.
===انجیل===
 
 
*بھلے ہی دائرے میں گھومیں لیکن علم پھر بھی بڑھے گی۔
Deuteronomy Rabbah (c. 450–900).
*وہ جو علم بڑھاتا ہے اپنے غم میں اضافہ کرتا ہے۔
Ecclesiastes. I. 18. Cited in: Hoyt's New Cyclopedia Of Practical Quotations (1922), p. &nbsp;419-23.
Romans 11:33 (KJV)
===مشرقی فلسفی===
** [[Thomas Aquinas]] (c.1225 – 1274) ''Opuscule'' II, ''De Regno''.
*اچھا سوال آدھا علم ہے۔
** [[Roger Bacon]] (c. 1214 – 1294) cited in: ''LIFE'', 8 sept 1958, p. &nbsp;73
* آدمی جتنا زیادہ جانتا ہے اتنا ہی اچھا ہے۔
** [[:w:Robert, 1st Earl of Gloucester|Robert of Gloucester]], ''Rhyming Chronicle''. Quote reported in ''Hoyt's New Cyclopedia Of Practical Quotations'' (1922), p. &nbsp;419-23.
 
==مزید دیکھیے==
237

ترامیم